آئی جی موٹروے پولیس شوکت حیات کا زیر تربیت اے ایس پیز سے موٹروے پولیس ہیڈکواٹر کے مطالعاتی دورہ کے موقع پر خطاب

پولیس اور عوام کے درمیان بداعتمادی کی فضاء کو دور کرنا انتہائی ضروری ہے ۔ یہ تاثر بالکل غلط ہے کہ اندرونی اور بیرونی دباؤ اور وسائل کی کمی اچھی کارکردگی کی راہ میں حائل ہیں۔ اگر آپ لو گ اپنے حصے کا کام ایمانداری اور مکمل یکسوئی سے کریں تو کسی قسم کا دباؤ یا وسائل کی کمی آپ کی راہ میں رکاوٹ نہیں بنے گی۔ میرے خیال میں پولیس کا محکمہ انتہائی اہم محکمہ ہے کیونکہ لوگوں کی جان و مال کی حفاظت پولیس کے پاس ہے۔ آپ خوش قسمت ہیں کہ آپ نے پولیس فورس کا انتخاب کیا ہے ۔ آپ اپنی ذمہ داریوں کو احسن طریقے سے نبھاتے ہوئے ہر حال میں لوگوں کی جان و مال کی تحفظ کو یقینی بنائیں ۔ ان خیالات کا اظہار انسپکٹر جنرل نیشنل ہائی ویزاینڈ موٹروے پولیس شوکت حیات نے موٹروے پولیس کے مطالعاتی دورے پر آئے ہوئے 43ویں بَیچ کے زیر تربیت ASsP سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ آئی جی شوکت حیات نے کہا کہ موٹروے پولیس کی کاکردگی پوری قوم کیلئے فخر کا باعث ہے ، ایمانداری ، خوش اخلاقی اور مدد کا جذبہ ہی سسٹم میں تبدیلی لا سکتا ہے ۔جس کی موٹروے پولیس ایک بہترین مثال ہے ۔ انہوں نے کہا کہ موٹروے پولیس نے اپنی بہترین کاکردگی سے ملک اور عالمی سطح پر ایک نام کمایا ہے ۔ موٹروے پولیس عوام میں روڈ سیفٹی کے شعور کواجاگر کرنے میں کوشاں ہیں۔ روڈ سیفٹی میں ایجوکیشن ، انجینئر نگ اور انفورسمنٹ بنیادی رکن ہیں، جس میں انفورسمنٹ کا رکن انتہائی نمایاں ہیں اور اس میں پولیس کا کردار انتہائی اہمیت کا حامل ہے ۔ موٹرو ے پولیس اس سلسلے میں کاکردگی کے اعلیٰ معیار کو مضبوطی سے تھامے ہوئے ہے۔ اس موقع پر آئی جی نیشنل ہائی ویز اینڈ موٹروے پولیس نے کہا کہ اپنی انتھک محنت اور بہترین صلاحیتوں کی وجہ سے موٹروے پولیس پاکستان کی بہترین اور معیاری ٹریفک ریگولیشن اور انفورسمنٹ ادارہ کے طور پر ابھر کا سامنے آیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ موٹروے پولیس نے عوام کی اخلاقی اور دوران سفر مشکل میں مدد کا کلچر پیش کرکے لوگوں کے دل جیتے ہیں۔ آئی جی نے کہا کہ موٹروے پولیس کے ڈرائیونگ لائسنسنگ سسٹم کو جلد ISO-17024کا درجہ حاصل ہو جائے گا جبکہ اسکی شاخیں کامرہ ، شیخوپورہ ،لاہور اور ٹریننگ کالج شیخوپورہ میں کھولی جا چکی ہیں۔اس موقع پر آئی جی نے کہا کہ ہمیں اللہ تعالیٰ کے سامنے سجدہ شکر بجالانا چاہیے کہ اس نے ہمیں اعلیٰ عہدوں پر فائز کیا ہے اور ان عہدوں کا حق ادا کرتے ہوئے ہمیں عوام کے ساتھ پولیس کے اعتماد کو ہر صور ت بحال کرنا ہے جس میں نئی نسل کے افسران کا انتہائی اہم کردار ہے ۔ ڈی آئی جی ہیڈ کواٹر غلام رسول زاہد ، اے آئی جی (HRM) ناصر محمود ستی اور اے آئی جی (لاجسٹکس اینڈ ہیڈ کواٹر) عباس احسن بھی موجود تھے ۔ اس موقع پراے آئی جی (لاجسٹکس اینڈ ہیڈ کواٹر) عباس احسن زیر تربیت اے ایس پیز کو موٹروے پولیس کی کارکر دگی کے حوالے سے تفصیلی بریفنگ دیتے ہوئے کہا کہ رواں سال اعداد شمار کے مطابق موٹروے پولیس نے شاہراؤں پر مشکلات کے اشکار تقریباََ435073روڈ یوزرز کو امداد فراہم کئے جبکہ ٹول پلازوں اور بس اڈوں پر تقریباََ4608414افراد کو روڈسیفٹی اور ٹریفک قوانین سے متعلق بریفنگ دی۔ اس کے علاوہ موٹروے پولیس ٹریننگ کالج میں جدید خطوط پر ٹریننگ دی جاتی ہے۔ موٹروے پولیس ٹریننگ کالج میں اسلام آباد ، خیبر پختونخوا ، بلوچستان، پنچاب وارڈن ، لاہور رنگ روڈ کے اہلکاروں کو نہ صرف خصوصی ٹریننگ دی بلکہ پنجاب سکل ڈویلپمنٹ فنڈ، نیوٹک کے اہلکاروں کے علاوہ مختلف نیشنل اور ملٹی نیشنل کمپنیوں کے ڈرائیور وں کو ماہر انسٹرکٹر کے زیر نگرانی ڈرائیونگ کی تربیت دی جاتی ہے تاکہ ہماری شاہراہیں ٹریفک حادثات سے پاک ہوں ۔ روڈ سیفٹی اور ٹریفک

قوانین سے آگاہی کے لئے موٹروے پولیس نے روڈ سیفٹی سیلیبس تیار کر کے تعلیمی نصاب میں شامل کرنے کے لیے صوبوں کو بجھوائی ہے۔ اس کے علاوہ روڈ سیفٹی سے آگاہی کے لئے ایف ایم ریڈیو کا قیام بھی عمل میں لایا ہے۔ آخر میں انسپکٹر جنر ل شوکت حیات نے اے ایس پیز میں سونےئر تقسیم کئے اور نصیحت کی کہ وہ اپنی ساری توجہ اپنے کام پر مرکوز رکھیں ۔

 

ASsP Visite 07-10-16 (5)

ASsP Visite 07-10-16 (4)